میراگیارہ سالہ بیٹا ہسپتال میں ابتدائی طبی امداد نہ ملنےکی وجہ سے فوت ہوا۔شہلارضا صوبائی وزیر

پاکستان پیپلز پارٹی کی رکن سندھ اسمبلی سندھ میں ہسپتالوں کے حوالے سے بنائے گئے قوانین اور ہسپتالوں میں ہونے والی غفلت سے جاں بحق ہونے والے بچوں کے حوالے سے جواب دیتے ہوئے آبدیدہ ہو گئیں، انہوں نے بتایا کہ ان کے اپنے دو بچے چھوٹی عمر میں وفات پا گئے تھے اور ان کے 11سالہ بیٹے کی موت اس لیے ہوئی تھی کیونکہ اسے ہسپتال والوں کی جانب سے ابتدائی طبی امداد نہیں دی جا سکی تھی۔

شہلا رضا نے بتایا کہ عید کے تیسرے روز ان کے بچوں کو حادثہ پیش آیا تھا جس میں انکی کم سن بیٹی موقعہ پر دم توڑ گئی تھی اور ان کا 11سالہ بیتا ہسپتال میں لاوارث پڑا رہا اور کسی ڈاکٹر نے اسے ابتدائی طبی امداد نہیں دی جس کے باعث اسکی موت واقع ہو گئی۔ شہلا رضاسندھ اسمبلی کی رکن ہیں اور سندھ کابینہ میں خواتین کے حقوق کی وزیر ہیں، انہوں نے بتایا کہ ایسے حادثات سے بچنے کے لیے یہ قانون بنایا گیا ہے کہ اگر کوئی بھی مریض یا زخمی کسی بھی ہسپتال لایا جائے گا تو اس کا علاج لازمی کیا جائے گا۔ 


Notice: Undefined variable: aria_req in /home/ahemnew1/public_html/wp-content/themes/Ahmad Theme/comments.php on line 73

Notice: Undefined variable: aria_req in /home/ahemnew1/public_html/wp-content/themes/Ahmad Theme/comments.php on line 79

اپنا تبصرہ بھیجیں