واشنگٹن : سکھوں نے خالصتان کے لیے ریفرنڈم کی تیاری شروع کردی ہے، دنیا بھر کے سکھ نومبر دوہزار بیس میں اپنی الگ ریاست کا فیصلہ کریں گے، سکھ فار جسٹس نے واشنگٹن میں ہیڈ کوارٹرز قائم کردیا۔مذید جانیں

تفصیلات کے مطابق بھارتی پنجاب سمیت سکھ مذہب سے تعلق رکھنے والے دنیا بھر کےسکھ قائدین بھارتی قبضے سے خو د کو آزاد کرانے اور خالصتان سکھ سٹیٹ قائم کرنے کے لیے کافی عرصے سے کوشاں ہیں اسی سلسلے میں پنجاب کو آزاد کرانے کے حوالے سے مہم زوروشورسے جاری ہے.

اس سلسلے میں ریفرنڈم کی تیاری کا آغاز کردیا گیا ہے، سکھ فار جسٹس نے اپنا ہیڈکوارٹر قائم کیا ہے، ریفرنڈم کیلئے20 ملکوں میں پولنگ بوتھ قائم کیے جائیں گے، جس میں بھارتی سکھ آن لائن ووٹنگ کے ذریعےحصہ لیں گے

واشنگٹن کی نیشنل پریس بلڈنگ میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے سکھ فار جسٹس کے قانونی مشیر گرپتونت سنگھ پنو کا کہنا تھا کہ سکھوں کیخلاف جاری بھارتی پروپیگینڈے کا جواب دینے کیلئے امریکی دارالحکومت میں تنظیم کا ہیڈ کوارٹر قائم کیا جارہا ہے.
نومبر 2020 میں ہونے والے ریفرنڈم کی تیاری بھی اب واشنگٹن سے کی جائے گی، امریکی محکمہ خارجہ سمیت کانگریس اراکین کے سامنے بھارت کا مکروہ چہرہ بے نقاب کیا جائے گا.
ایک سوال کے جواب میں بھارت میں شہریت کے حوالے سے نئے متنازعہ قانون پر بات کرتے ہوئے مقررین کا کہنا تھا کہ مودی حکومت کے اس اقدام سے ثابت ہوتا ہے کہ بھارت میں اقلیتوں کیلئے کوئی جگہ نہیں، کشمیریوں سمیت سکھوں اور دیگر اقلیتوں کے حقوق خطرے میں ہیں.
انہوں نے مزید کہا کہ ریفرنڈم کیلئے بیس ممالک میں پولنگ بوتھ قائم کئے جائیں گے جبکہ بھارت میں رہنے والی سکھ آن لائن ووٹنگ کے ذریعے ریفرنڈم میں حصہ لیں گے،،دنیا بھر کے سکھ ریفرنڈم میں اپنی الگ ریاست کے حوالے سے فیصلہ کریں گے۔
Custom Advertisement

Notice: Undefined variable: aria_req in /home/ahemnew1/public_html/wp-content/themes/Ahmad Theme/comments.php on line 73

Notice: Undefined variable: aria_req in /home/ahemnew1/public_html/wp-content/themes/Ahmad Theme/comments.php on line 79

اپنا تبصرہ بھیجیں