بابری مسجد کیس سپریم کورٹ نے فیصلہ سنا دیا مسلمانوں میں خوشی کی لہر

2019ء) : بھارتی سپریم کورٹ نے بابری مسجد میں پوجا کرنے سے روک دیا ۔ تفصیلات کے مطابق ہندو برادری کی جانب سے پنڈت امرناتھ مشرا نے سپریم کورٹ میں‌ ایک درخواست دائر کی جس میں کہا گیا کہ انہیں بابری مسجد پر پوجا کرنے کی اجازت دی جائے ۔ جس پرسپریم کورٹ کے چیف جسٹس رنجن گوگوئی نے یہ کہہ کراس درخواست کو خارج کردیا کہ تم لوگ کسی کو امن سے رہنے نہیں‌ دوگے ۔

اور ساتھ ہی الہ آباد ہائی کورٹ کے اس فیصلے کو بھی برقراررکھا جس میں کہا گیا تھا کہ اس طرح کی درخواست دائر کرنے پر پانچ لاکھ روپے جرمانہعائد کیا جائے گا۔ پنڈت امرناتھ مشرا کی طرف سے اس حکم نامے کو ختم کرنے کی بھی استدعاکی گئی تھی۔ یاد رہے کہ بابری مسجد اور رام مندر کے مسئلے کو حل کرنے کےلیے ایک کمیٹی تشکیل دی گئی جس کی سربراہی سپریم کورٹ کے جج ایف ایم آئی کفیل اللہ کے علاوہ ،شری شری روی شنکر اور سپریم کورٹ کے سینئر وکیل شری رم پنچو شامل ہیں۔

یہ کمیٹی سپریم کورٹ کے حکم سے بنائی گئی۔ جبکہ اترپردیش کے دہشتگردوزیر اعلیٰ یوگی ادتیا ناتھ نے کہا کہ وہ رام مندر بنانے کا دعویٰ کبھی نہیں چھوڑیں گے۔واضح رہے کہ بابری مسجد کی جگہ رام مندر کی تعمیر بی جے پی کے انتخابی منشور کا بھی حصہ ہے۔ بھارت کی حکمران جماعت بھارتیہ جنتا پارٹی ( بی جے پی) نے اپنا انتخابی منشور پیش کیا ، اس منشور میں بھی بی جے پی نے اپنی روایتی انتہا پسندی کی پالیسی کو برقرار رکھا اور نفرت کو ہوا دینے کی بھرپور کوشش کی،بھارتیہ جنتا پارٹی ( بی جے پی) کے منشور کے مطابق بابری مسجد کی جگہ رام مندر کی تعمیر کی جائے گی ۔

واضح رہے کہ بھارت کی حکمران جماعت بھارتیہ جنتا پارٹی ( بی جے پی) کے رہنماؤں بالخصوص بھارتی وزیراعظم نریندرا مودی کو پاکستانکے خلاف زہر اُگلتے ہوئے ہی دیکھا گیا۔


Notice: Undefined variable: aria_req in /home/ahemnew1/public_html/wp-content/themes/Ahmad Theme/comments.php on line 73

Notice: Undefined variable: aria_req in /home/ahemnew1/public_html/wp-content/themes/Ahmad Theme/comments.php on line 79

اپنا تبصرہ بھیجیں